یژمردہ

یژمردہ…

میں وہ انسان ہوں جس سے روح چھین کر کسی نے مشینری لگا دی ہو۔نہ اب میں کچھ سن سکتی ہوں نہ بول سکتی ہوں، نہ محسوس کر سکتی ہوں اور نہ کچھ بتا سکتی ہوں۔بس جی حضور جی حضور کرتی ہوں۔بس بٹن دبائیں اور منٹ سے بھی کم وقت میں آپ کو رسپانس ملے گا۔جو کام فیڈ کریں گے،ہو جائے گا۔۔۔۔میں کبھی نا نہیں کروں گی اورنہ ہی میری کوئی پسند نا پسند ہے۔۔۔مجھے نہ کچھ اچھا لگتا ہے نہ ہی کچھ برا لگتا ہے۔۔۔نہ میرے کوئی احساسات ہیں اور نہ میری کوئی حس ہے۔۔۔۔
پر اگر کسی کو میری روح سے سروکار ہو تو اسے شدید ناکامی کا ہی منہ دیکھنا پڑے گا کیونکہ میں جس زمین کےاوپر کھڑی تھی،۔۔۔ اب پیروں کے نیچے وہ زمیں باقی نہیں۔۔۔ جس آسماں پر اترائے اترائے پھرتی تھی۔۔۔اب وہ آسماں بھی میرا نہیں۔۔۔۔وہ ہوا جس کے بل پر میرے بادباں کو ناز تھا۔۔۔۔اس ہوا کا رخ بھی تبدیل ہوا اور وہ ستارہ جس کے در پرکالی راتوں کو کاٹنے کا سوچا کرتی   تھی۔۔۔وہ ستارہ بھی مجھ سے منہ موڑ گیا

پس اب میں ہوں،دل ہے اور یژمردگی کا ایساقبر ستاں ہے جہاں مجھے دفن ہونا ہے،نہ میرا کوئی جنازہ پڑھنے والا ہےاور نہ جنازہ  پڑھنانے والا

      ہے۔ ..بس مجھےاب یہی رہنا ہے اور یہی میری سچی محبت کی

سزا ہے

Advertisements

31 thoughts on “یژمردہ

    • jo aap ko nazar aa raha. Basically healthcare journalist and freelancer hon. Dono mei non fiction ya kabi kabi fiction story b likhti hon. But basically, i love fiction writing. Novel likhnyy ka irada hai. humor log keh rahy k likho…lets see

      Like

  1. oye hoye hoye hoye! that’s amazing, jab novel likho to mujhe zaroor bhejna, wase fiada koi nahi hota kitne kitne achy novel pary han market me koi nahi parhta,
    mein bhi likhta hon kuch na kuch mgr apki trha ka nahi, mgr mene ye he soch kr kuch publish kiya k yahan log Allama Iqbal,Ghalib aor Meer ko nahi parhty hamen kis ne parhna ha !!! ab wase bhi log adab se bht door hoty ja rahe han!

    Liked by 1 person

    • Ap ki soch thek hai. mager mera nazriya bht mukhtalif hai. Mei is liye ni likh ri k log mujhy parheen. Jb tak mei ye soch k likhti thee, meri kahaniyo mei jaan ni ati thee. Ab mei ye soch k likhti hoon k “Mujy likhna hai…mjy apny emotions likhny hain…dil se likhna hai..jo socha hai bas qohi likhna hai..koi bnao singhar ni…koi shokhi ni…koi dad wasooli ki chahat ni…bas likhna ha…apny liye. likhun gi ni to mere andar k toofan rukeen gy ni..mujy kha jain gy….dosry,aap ne sahi kaha log ghalib ko ni perty, iqbal ko ni perty…na perheen….! hume wohi perhy ga jo hume samajh paaye ga!

      Liked by 1 person

    • Aur itna asaan ni hota writer jo “keh” raha hai us ko “exactly” wesy he smjhna..bht layers hoti hain ….bohut “ghanchakar” hoty writers…ghuma dety jahan se ghumana chahty reader ko!

      Like

    • mat publish keren. as far as it gives you satisfaction. jb mind bany tb publish kerna. Me apni autobio likh ri but publish 50 age k baad kerwaon gi…so wait for the right time

      Like

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s